تعلیمی اداروں کو کھلولنے کیلئے کورونا کی صورتحال کا جائزہ لینے کیلئے اہم اجلاس منعقد

116

اجلاس میں صوبائی وزرائے تعلیم اور صحت کے اعلی حکام نے بھی شرکت کی۔

اسلام آباد(نمائندہ رخسار بٹ)گلوبل ٹائمز میڈیا رپورٹ کے مطابق تعلیمی اداروں کو کھولنے کے لئے کورونا کی صورتحال کا جائزہ لینے کے لیے نیشنل کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹر میں وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود اور اسد عمر کے زیر صدارت اہم اجلاس ہوا اجلاس میں صوبائی وزرائے تعلیم اور صحت کے اعلی حکام نے بھی شرکت کی وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود نے کہا کہ ‏نویں،دسویں ، گیارہویں اور بارہویں جماعتوں کےلئے تمام تعلیمی ادارے اٹھارہ جنوری سے کھولنے کا فیصلہ پہلی سے آٹھویں کے لئے سکول یکم فروری سے کھولے جائیں گے اور ملک بھر میں یونیورسٹیوں بھی یکم فروری کو کھلیں گی ‏نویں سے بارہویں جماعتوں کے امتحانات کی وجہ سے ان کا تعلیمی سلسلہ شروع کرنا ضروری ہے کیونکہ وفاقی و صوبائی حکومتوں نے یہ فیصلہ کیا ہےکہ اس سال بغیر امتحان کے کسی کو پروموٹ نہیں کیا جائے گا۔ 9th-12th کے سکول 18 جنوری سے کھول دئیے جائیں گے وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود نے بریفنگ کے دوران کہا کہ ‏نویں سے بارہویں کے لئے پورے ملک میں سکول 18 جنوری سے کھلیں گے۔ یکم فروری سے یونیورسٹیاں اور پہلی سے مڈل کلاس کے سکول کھلیں گے اگلے ہفتے اس بات کا جائزہ لیا جائے گا کہ جن شہروں میں کورونا کیسز کی شرح ذیادہ ہے ان کےلئے کوئی سمارٹ اپروچ پالیسی بنے۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.

%d bloggers like this: